QURBANI (ANIMAL SACRIFICE) IS NOT ALLOWED

QURBANI (ANIMAL SACRIFICE) IS NOT ALLOWED

وَأَتِمُّواْ الْحَجَّ وَالْعُمْرَةَ لِلّهِ فَإِنْ أُحْصِرْتُمْ فَمَا اسْتَيْسَرَ مِنَ الْهَدْيِ وَلاَ تَحْلِقُواْ رُؤُوسَكُمْ حَتَّى يَبْلُغَ الْهَدْيُ مَحِلَّهُ فَمَن كَانَ مِنكُم مَّرِيضاً أَوْ بِهِ أَذًى مِّن رَّأْسِهِ فَفِدْيَةٌ مِّن صِيَامٍ أَوْ صَدَقَةٍ أَوْ نُسُكٍ فَإِذَا أَمِنتُمْ فَمَن تَمَتَّعَ بِالْعُمْرَةِ إِلَى الْحَجِّ فَمَا اسْتَيْسَرَ مِنَ الْهَدْيِ فَمَن لَّمْ يَجِدْ فَصِيَامُ ثَلاثَةِ أَيَّامٍ فِي الْحَجِّ وَسَبْعَةٍ إِذَا رَجَعْتُمْ تِلْكَ عَشَرَةٌ كَامِلَةٌ ذَلِكَ لِمَن لَّمْ يَكُنْ أَهْلُهُ حَاضِرِي الْمَسْجِدِ الْحَرَامِ وَاتَّقُواْ اللّهَ وَاعْلَمُواْ أَنَّ اللّهَ شَدِيدُ الْعِقَابِ(2:196)

And complete the Hajj and the Umrah according to Allah’s order, must stop providing the animal sacrifice/the offering and do not waste your capital to expand the business of animal sacrifice/the offering. Whoever amongst you has become ill or is suffering from hardship must be paid off from that capital, from blocking own necessities or from charity or righteousness. When you are fully ensured what to facilitate from the offering /the sacrifice do enjoy from Umrah to Hajj, whoever could not do this must block own necessities for three days during Hajj   and seven days when returned, these are complete ten. So those who are not able to attend Al Masjid Al Haram, however firmly rely on Allah and know that Allah is the intently watchful (correct translation of the verse 2:196 of the Quran)

اور پورا کرو    حج اور عمرہ  اللہ کے حکم کے مطابق۔لازمی     روک دو     فراہمی    جانوروں کی قربانی  کی۔ اور   نہ  اْڑاؤ   اپنا  سرمایہ جانوروں کی قربانی کی دکانداری چلانے کے لئے / اور اپنا ٹٹرا گنجا نہ کرو قربانی کی دکانداری چمکانے کے لئے۔جو درحقیقت ہو گئے ہوں تم میں سے   بیمار یا کسی اذیت/پریشانی/مصیبت  میں  مبتلا  ہوں  اس مال سے ان کی جان  بچاؤ/ان کو  بیماری ،  مصائب اور مشکلات کی تکلیف سے  نجات دلانے  کے لئے  اس مال میں سے رقم اداکرو۔ چاہے   خواہشات  روک کر    یا صدقہ سے یا  ذہد و تقویٰ  سے کرو۔جب  اس بات کو یقینی بنالو کہ   قربانی   کیا    ہے یا  قربانی سے کس کو سہولت مہیا کرنی ہے تو   شوق سے       عمرہ سے لے کر  حج   تک جاؤ۔جو یہ  کام نہیں کرسکا  اس کے لئے  ضروری ہے کہ وہ    حج کے  دوران تین دن اور واپس جاکر  سات دن   اپنی   خواہشات روک کر  اس سے ضرورت مندوں کی ضروریات پورا کرے  جو کل دس دن    ہیں۔جو کوئی  مسجدالحرام میں آنے کے قابل نہیں ہوسکا  ساتھ   اللہ  کے مضبوطی سے جڑا رہے/تاہم اللہ پر  پکا بھروسہ رکھے   اور جان لے  کہ  اللہ  نہایت  باریک بین   ہے/عقاب کی نظر رکھتا ہے۔(صحیح ترجمہ 2:196)

Please email to quranguide@hotmail.com  to get a free pdf copy in Urdu for the detailed analysis of the above verse 2:196 of the Quran together with the fact finding research.

Advertisements